ڈائریکٹرایجوکیشن کویرغمال بنانے کی کوشش۔ایم پی اے پرتشدد۔ مقدمہ درج کرلیاگیا۔


بشام ( رپورٹ: سرفراز خان ) صو بائی وزیر تعلیم ضیاء اللہ بنگش نے انکشاف کیا ہے کہ دورہ کوہستان کے دوران ان کے ساتھ جا نے والے صو بائی ڈائریکٹر تعلیم کو دو افراد نے یرغمال بنا نے کی کوشش کی اور ان کی موجود گی میں ایم پی اے پرتشدد کیا گیا ، ضلعی انتظامیہ کوہستان نے ان عناصر کے خلاف مقدمہ در ج کر کے تفتیش شروع کر دی ہے ۔ بشام میں صحا فیوں سے گفتگو کر تے ہوئے مشیر تعلیم ضیاء اللہ بنگش نے کہا کہ دورہ کوہستان کے دوران واپسی پر چند عناصر نے کرائے کے بچے سٹرک پر نکال کر احتجاج کیا اور ان کے صو بائی ڈائریکٹر تعلیم کو یر غمال بنالیا اور مقامی ایم پی اے پر تشدد بھی کیا۔ بعدازاں ضلعی انتظامیہ نے ان پر سر پندوں کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے ، انہوں نے کہا کہ یہ عمل کوہستان اور پختون روایات کے خلاف تھا۔

ضیا ء اللہ بنگش نے ان سے منسوب اس بیان کی تر دید کی کہ صوبے میں ساٹھ فیصد اساتذہ کو نصاب پر عبور حاصل نہیں انہوں نے کہا کہ یہ اIMUانڈیپنٹ مانیٹرنگ یو نٹ کی رپورٹ ہے ، اساتذہ ہمارے لئے قابل احترام ہے اور ان کی قدرکرتے ہیں ، ہمارے دور میں 57ہزار ٹیچرز بھر تی کئے گئے ہیں انہوں نے عوام پر زور دیا کہ وہ داخلہ مہم میں محکمہ تعلیم کی مدد کریں۔ انہوں نے کہا کہ اس سال آٹھ لاکھ بچوں کو سکولوں میں داخل کرنے کا ٹارگٹ ہے جو کہ انشاء اللہ پورا کیا جائیگا۔ انہوں نے کہا کہ عوام دو سال میں تبدیلی محسوس کریں گے، بعدازاں انہوں نے گورنمنٹ ہائیرسیکنڈری سکول بوٹیال پر اچانک چھا پہ مارا اور ناقص کار کر د گی پر پرنسپل کے فوری تبادلے اور غیر حاضر اساتذہ کے خلاف کاروائی کا حکم دیا ، اس مو قع پر وزیر اطلاعات شوکت علی یوسفزئی کے بھائی لیاقت یوسفزئی اور پی ٹی ائی کے رہنماء وقار احمد خان بھی ان کے ساتھ تھے۔ مشیر تعلیم نے بعدازاں الپوری میں داخلہ مہم کا افتتاح بھی کیا۔

gif

gif


Comments

comments