ایوب میڈیکل کالج :سالانہ مرمتی کافنڈہڑپ کیاجانے لگا۔ 


ایبٹ آباد:ایوب میڈیکل کالج بھوت بنگلے میں تبدیل۔ سالانہ مرمتی کالاکھوں کا فنڈہڑپ کیاجانے لگا۔ اس ضمن میں ذرائع نے صحافیوں کو بتایاکہ صوبائی حکومت کی جانب سے ایوب میڈیکل کالج میں مرمتی اور تزئین و آرائش کیلئے لاکھوں کے فنڈز جاری کئے جاتے ہیں۔ کالج انتظامیہ ان فنڈز کو خرچ نہیں کررہی۔ جبکہ کاغذی خانہ پری کرکے فنڈز ہڑپ کئے جا رہے ہیں۔ کالج کی موجودہ حالت کسی بھوت بنگلے سے کم نہیں ہے۔ کالج میں سٹریٹ لائٹس نہ ہونے کی وجہ سے سرشام اندھیراچھاجاتاہے۔ جس کی وجہ سے جرائم پیشہ عناصر کالج کی گراؤنڈ میں موجود رہتے ہیں۔

بوائز ہاسٹل سے واپڈاگرڈ کی جانب جانیوالی سڑک کے درمیان میں گڑھا کھوداگیاہے۔ جس کی وجہ سے کوئی بھی گاڑی یہاں سے گزر نہیں سکتی۔ لیکن کالج انتظامیہ کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگ رہی اور سڑک کو مرمت نہیں کیاجارہاہے۔کالج کے ہاسٹلوں اور کلاس رومز کی حالت انتہائی خراب ہوچکی ہے۔ جگہ جگہ سے رنگ اکھڑچکا ہے۔ کالج کے فٹ پاتھ ناقابل استعمال ہوچکے ہیں۔ کالج میں متعدد فٹ پاتھ ٹوٹ چکے ہیں۔ جن کو مرمت نہیں کروایاجارہاہے۔


Comments

comments