ہزارہ آن لائن جرنلسٹس ایسوسی ایشن کاقیام۔ ہزارہ کے صحافیوں نے اپنے حقوق کے تحفظ کیلئے ملک کی پہلی تنظیم بنالی۔ 


ایبٹ آباد:ہزارہ آن لائن جرنلسٹس ایسوسی ایشن کاقیام۔ ہزارہ کے صحافیوں نے اپنے حقوق کے تحفظ کیلئے ملک کی پہلی تنظیم بنالی۔ ناصرتنولی صدر، شفیق صادق جنرل سیکرٹری اور سلطان ڈوگراتفاق رائے سے چیئرمین بنالئے گئے۔ ذرائع کے مطابق ڈیجیٹل میڈیا کی بڑھتی ہوئی مقبولیت کی وجہ سے ہزارہ بھر میں مختلف صحافی آن لائن جرنلزم بھی کررہے ہیں۔ مغربی ممالک میں آج کل ڈیجیٹل میڈیا کیلئے ’’موجو‘‘ موبائل جرنلزم کی اصلاح استعمال کی جارہی ہے۔ اوربڑے بڑے نیوزچینلز’’موجو‘‘/ڈیجیٹل میڈیا کی طرف تیزی سے جارہے ہیں۔صحافی معاشرے کی آنکھ اور کان ہوتے ہیں۔ یہ معاشرے کو وہ چیزیں دکھاتے ہیں جوکہ عام آدمی کی آنکھ سے اوجھل ہوتی ہیں۔ اور صحافیوں کے ذریعے ہی عوام الناس کو مختلف واقعات کے بارے میں معلومات ملتی ہیں۔اس سلسلے میں ہزارہ بھر میں آن لائن جرنلزم کرنیوالے صحافیوں کا اہم اجلاس ایبٹ آباد کے مقامی ہوٹل میں منعقد ہوا۔ جس میں ہزارہ بھر میں 42آن لائن ویب سائیٹ اورپیجزچلانے والے صحافیوں نے شرکت کی۔

اجلاس میں اتفاق رائے سے ہزارہ آن لائن جرنلسٹس ایسوسی ایشن کے قیام کا اعلان کیاگیا۔ اور اتفاق رائے سے وائس آف ہزارہ کے سی ای او سلطان ڈوگر کو چیئرمین،وائس آف ہری پور کے سی ای او شاہد تبسم کو وائس چیئرمین، آصف نیوز اوگی کے سی ای او آصف خان کو سرپرست اعلیٰ، سی آئی ڈی نیوز اپ مانسہرہ کے سی ای او ناصر علی تنولی کو صدر، صادق نیوز ایبٹ آباد کے سی ای او شفیق صادق کو جنرل سیکرٹری، ہاٹ نیوز ایبٹ آباد کے منیجنگ ڈائریکٹر ندیم جدون کوڈپٹی جنرل سیکرٹری، مانسہرہ سے میرافضل گلزار کو سینئر نائب صدر،ہزارہ ون اور ہزارے دی آواز کے سی ای او عالم زیب اعوان کوسینئر نائب صدر اوّل، مانسہرہ سے صدیق اورنگزیب کو سینئر نائب صدر دوئم،بفہ پکھل میڈیاروم کے سی ای او شفقت جاوید کو سینئر نائب صدر سوئم، ایبٹ آباد نیوز کے سی ای اوسلیم تنولی کو نائب صدر،الجزیرہ ون کے سی ای اویاسرشہزاد تنولی کونائب صدر اوّل، حویلیاں اپ ڈیٹ کے سی ای او قادر بخش کو نائب صدر دوئم، بٹگرام میڈیا روم کے سی ای او عطاء اللہ نسیم کو نائب صدر سوئم، حویلیاں ڈاٹ نیٹ کے سی ای او ہارون قریشی کوجوائنٹ سیکرٹری، ایبٹ آباد میڈیا روم کے سی ای او رمیض راجہ کوسیکرٹری اطلاعات، ہاٹ نیوز کے سی ای او علی زمان کو فنانس سیکرٹری، وائس آف ایبٹ آباد کے سی ای او سردار فیضان کو آفس سیکرٹری مقرر کردیاگیا۔

ایگزیکٹو کونسل کے ممبران میں سیّدکمال شاہ(ایبٹ آباد)، ہارون تنولی، اشتیاق اعوان ایبٹ آباد، سیّدواصب شاہ کوہستان،رحمت نبی کوہستان، سیّدکمال شاہ (مانسہرہ)،عاطف حسین ایبٹ آباد، ملک گل نوازحویلیاں،شعیب الرحمن کوہستان، ڈسٹرمیڈیا مانسہرہ کے گلفرازافضل، طاہر محمودایبٹ آباد، ڈاکٹرعتیق چاندمانسہرہ، جہانگیرشاہ لوئرتناول ایبٹ آباد، عتیق اعوان ایبٹ آباد،سعدی سعدایبٹ آباد،رمیض گل عباسی اپرگلیات، عامرزیب گلیات،سیف اللہ عرف سیفی ایبٹ آباد،نعیم اعوان ہری پور ،عبدالباسط اعوان ایبٹ آباد، یاسراحمد ایبٹ آباد اور لیاقت قریشی ایبٹ آبادشامل ہیں۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے چیئرمین سلطان ڈوگر، صدر ناصر علی تنولی، جنرل سیکرٹری شفیق صادق، عالم زیب اعوان، کمال شاہ، ندیم جدون اور دیگر نے کہاکہ ہزارہ آن لائن جرنلسٹس ایسوسی ایشن کے قیام کا سب سے اہم مقصد ہزارہ بھر میں آن لائن جرنلزم کرنے والے صحافیوں کو ایک پلیٹ فارم پر اکٹھا کرنا ہے۔ ہزارہ آن لائن جرنلسٹس ایسوسی ایشن میں شامل ہونے والے صحافیوں کو آن لائن جرنلزم کے بارے میں تربیت دی جائے گی اوران کیلئے ورکشاپس کا انعقاد کیاجائے گا۔ ہزارہ آن لائن جرنلسٹس ایسوسی ایشن میں شامل صحافیوں کو فوٹوگرافی، ویڈیوگرافی، ویڈیو ایڈیٹنگ، وائس اوور، ویب سائیٹ مینجمنٹ کے بارے میں بھی تربیت دی جائے گی۔ ہزارہ آن لائن جرنلسٹس ایسوسی ایشن میں شامل ہونے والے صحافیوں کیلئے سیکھنے کے زیادہ سے زیادہ مواقع فراہم کئے جائیں گے۔ ہزارہ آن لائن جرنلسٹس ایسوسی ایشن میں شامل ہونیوالے صحافیوں کیلئے نہ صرف قومی بلکہ بین الاقوامی صحافتی اصولوں کی پابندی کرنا لازمی ہوگی۔ بغیرتصدیق شدہ خبر کی اشاعت، کاپی رائیٹ کی خلاف ورزی نہ کرنے کی یقین دہانی کراناہوگی۔ صحافی معاشرے کی آنکھ اور کان ہوتے ہیں۔ یہ معاشرے کو وہ چیزیں دکھاتے ہیں جوکہ عام آدمی کی آنکھ سے اوجھل ہوتی ہیں۔ اور صحافیوں کے ذریعے ہی عوام الناس کو مختلف واقعات کے بارے میں معلومات ملتی ہیں۔ہزارہ بھر میں آن لائن جرنلزم کرنیوالے صحافیوں کو مختلف گروپس کی وجہ سے مسلسل دھمکیاں بھی مل رہی ہیں۔ جس کی وجہ سے آن لائن جرنلزم کرنیوالے صحافیوں کیلئے سیکورٹی خدشات میں مسلسل اضافہ دیکھنے میں آرہاہے۔ ہری پور میں دو صحافیوں کو محض پوسٹیں لگانے کی وجہ سے قتل کیاجاچکاہے۔ اس تناظر میں آن لائن جرنلزم کرنیوالے صحافیوں کے تحفظ کیلئے ہزارہ آن لائن جرنلسٹس ایسوسی ایشن اپنا بھرپور کردار ادا کرے گی۔ یہ چیز بھی نوٹ کی جارہی ہے کہ مختلف مافیاز کیخلاف حقائق پر مبنی خبرشائع کرنیوالے صحافیوں کو جہاں مسلسل دھمکیاں دی جاتی ہیں۔ وہیں چند افراد صحافیوں کی کردار کشی بھی شروع کردیتے ہیں۔ ہزارہ آن لائن جرنلسٹس ایسوسی ایشن کی ایک مانیٹرنگ ٹیم مذموم مقاصد کی تکمیل کیلئے صحافیوں کیخلاف منفی پروپیگنڈہ کرنیوالے عناصر سے آہنی ہاتھوں سے نمٹے گی۔ایسے کرنیوالے عناصر کا تمام ریکارڈ مرتب کیا جائے گا۔ان لوگوں کیخلاف پولیس کی مدد سے قانونی چارہ جوئی کی جائے گی۔ اور اگر ضرورت پڑی تو پھر سڑکوں پر احتجاج سے بھی دریغ نہیں کیاجائے گا۔اور ایسے عناصر کو تمام پیجز پر مکمل طور پر بلاک کردیاجائے گا۔اگر ہزارہ آن لائن جرنلسٹس ایسوسی ایشن کے کسی ممبر کی وجہ سے اگر کوئی شکایت ہوتو ایسوسی ایشن کے عہدیداروں سے رابطہ کیاجائے۔ ہم اس کی مکمل چھان بین کرکے ایسے ممبر کیخلاف کارروائی عمل میں لائیں گے۔

gif

gif


Comments

comments