ایکسرے ٹیکنیشن سے ڈینٹل سرجن کیسے بنا؟ تفصیلات لنک میں۔


ایبٹ آباد:ایوب ٹیچنگ ہسپتال کا ایکسرے ٹیکنیشن ڈینٹل سرجن بن کر شہریوں کو لوٹنے میں مصروف۔ متعلقہ اداروں نے مٹھی بند ہونے کے بعد خاموشی اختیار کرلی۔ اس ضمن میں مقامی شہریوں نے صحافیوں کو بتایاکہ ایوب ٹیچنگ ہسپتال کے سامنے واقع ڈاکٹرپلازہ میں ایوب ٹیچنگ ہسپتال کا ایکسرے ٹیکنیشن مہ نور ڈینٹل کلینک کے نام سے شہریوں کو لوٹنے میں مصروف ہے۔ایکسرے ٹیکنیشن اپنے آپ کو ڈینٹل سرجن ظاہر کرتاہے۔ اور یہ سلسلے پچھلے پندرہ سالوں سے جاری ہے۔ شہریوں کے مطابق ہم نے اس غیرقانونی ڈینٹل کلینک کے بارے میں محکمہ صحت اور ہیلتھ ریگولیٹری اتھارٹی کو بھی آگاہ کیا۔ لیکن کسی نے بھی کوئی کارروائی نہیں کی۔ شہریوں کے مطابق مہ نورڈینٹل کلینک میں دانتوں کے علاج کے اتنے ہی پیسے وصول کئے جاتے ہیں۔ جتنے ایک اعلیٰ تعلیم یافتہ ڈینٹل سرجن وصول کرتاہے۔ اس کے علاوہ اس ڈینٹل کلینک میں اوزاروں کو جراثیم سے پاک کرنے کیلئے کوئی نظام موجود نہیں ہے۔ شہریوں نے مذکورہ غیرقانونی ڈینٹل کلینک کو فوری طور پر سیل کرنے کا مطالبہ کیاہے۔


Comments

comments