بجلی کے کھمبوں کی تنصیب کے نام پر ناظم حاجی ارشد اعوان نے عثمان آباد کے مکینوں سے لاکھوں اینٹھ لئے۔ ٹرانسفارمر کی تنصیب کیلئے مزید رقم کا مطالبہ۔


ایبٹ آباد:بجلی کے کھمبوں کی تنصیب کے نام پر ناظم حاجی ارشد اعوان نے عثمان آباد کے مکینوں سے لاکھوں اینٹھ لئے۔ ٹرانسفارمر کی تنصیب کیلئے مزید رقم کا مطالبہ۔ اس ضمن میں محلہ عثمان آباد کے رہائشیوں نے صحافیوں کو بتایاکہ ناظم ویلج کونسل بانڈہ قاضی ون حاجی ارشد اعوان جوکہ اپنے آپ کو عوامی خدمات گارکہلواتے ہیں۔ موصوف نے چند ہفتے قبل علاقے کی مختلف گلیوں کیلئے بجلی کے آٹھ کھمبوں کی منظوری حاصل کی۔ اور ان کھمبوں کی تنصیب کیلئے فی گھر اڑھائی ہزار روپے وصول کئے۔ مقامی لوگوں نے الزام لگایاکہ ناظم حاجی ارشد اعوان نے لوگوں سے کہاکہ بجلی کے کھمبوں کی تنصیب پر خرچہ آئے گا جوکہ لوگوں کو برداشت کرنا پڑے گا۔

مقامی لوگوں کے مطابق مجموعی طور پر ناظم حاجی ارشد اعوان نے علاقے کے لوگوں نے بجلی کے کھمبوں کی تنصیب کے نام پر اڑھائی لاکھ روپے کا چندہ جمع کیا اور ہڑپ کر گیا۔ مقامی لوگوں نے مزید بتایاکہ ناظم حاجی ارشد اعوان نے اب مین ٹرانسفارمر کا کام رکوا رکھاہے۔ لوگوں کا کہنا ہے کہ ناظم ارشد اعوان مزید پیسے مانگ رہاہے کہ تمام پیسے بجلی کے پولوں کی تنصیب پر خرچ ہوچکے ہیں۔ مین ٹرانسفارمر کی تنصیب کیلئے مزید رقم کی ضرور ت ہے۔ جب تک لوگ مزید پیسے نہیں دینگے۔ اس وقت تک بجلی کا ٹرانسفارمر نصب نہیں ہوسکتا۔محلہ عثمان آباد کی مختلف گلیوں میں نصب کئے جانیوالے ان بجلی کے کھمبوں کے نام پر ناظم ارشد اعوان نے بھرپور مال بنالیا ہے۔عثمان آباد کے لوگوں نے محکمہ اینٹی کرپشن،ایم این اے علی خان جدون اور صوبائی وزیر خوراک الحاج قلندر خان لودھی سے ناظم حاجی ارشد اعوان کیخلاف تحقیقات کا مطالبہ کیاہے۔

gif


Comments

comments