ناظم جمیل عباسی کو قتل کرکے لاش ویرانے میں پھینک دی گئی۔ 


ایبٹ آباد:گاؤں سے دشمنیاں ختم کیلئے سرگرم ناظم جمیل عباسی کو قتل کرکے لاش ویرانے میں پھینک دی گئی۔ تھانہ بگنوترمیں نامعلوم افراد کیخلاف مقدمہ درج۔ اس ضمن میں مقامی ذرائع نے صحافیوں کو بتایاکہ گاؤں بانڈی میرا میں دوگروپوں کے مابین پچھلے کچھ عرصہ سے دشمنی چلی آرہی تھی۔ جس میں دوافراد کو بیدردی سے قتل کیا جاچکاہے۔ جبکہ ایک گھر کو بھی نظرآتش کیاجاچکاہے۔ اس دشمنی کی وجہ سے پورے علاقے میں کشیدگی پائی جاتی ہے۔ اورلوگ خوف ہراس کی فضاء میں رہنے پر مجبور تھے۔ ویلج کونسل بانڈی میرا کے ناظم جمیل عباسی اس دشمنی کو ختم کرانے کیلئے سرگرم تھے۔ اور انہوں نے اس خون خرابے کو ختم کرانے کیلئے گرینڈ جرگہ بلا رکھاتھا۔ ناظم جمیل عباسی اس دشمنی کو ختم کرنے کیلئے اپنی جیب سے دس لاکھ روپے بھی دینے کیلئے تیار تھے۔

ذرائع کے مطابق خفیہ ہاتھ ناظم جمیل عباسی کی ان کوششوں سے خوش نہ تھے اور وہ علاقے میں اس دشمنی کو ختم نہیں کرناچاہتے تھے۔ ذرائع کے مطابق بدھ کی رات نو بجے نامعلوم افرادناظم جمیل عباسی کے گھر میں گیا۔ جہاں سے وہ ناظم جمیل عباسی کو اپنے ساتھ لے گئے۔ اور رات کی تاریکی میں ناظم جمیل عباسی کو گولیاں مار کر لاش گھر کے قریب پھینک کر فرار ہوگئے۔ بدھ کی صبح مقامی لوگوں نے ناظم جمیل عباسی کی لاش خون میں لت پت دیکھی تو تھانہ بگنوتر کو اطلاع دی۔ جس کے بعد پولیس کی نفری موقع پر پہنچ گئی اور لاش کو قبضے میں لیکر پوسٹمارٹم کیلئے ڈی ایچ کیو ہسپتال منتقل کردیا۔ پولیس کے مطابق تھانہ بگنوترمیں نامعلوم افراد کیخلاف قتل کا مقدمہ درج کرلیاگیاہے۔


Comments

comments