غیرمعیاری ملبوسات: ڈے ٹوڈے سٹور پر جھگڑے معمول بن گئے۔


ایبٹ آباد: ڈے ٹوڈے پرغیرمعیاری ملبوسات کی فروخت۔ واپسی پرگاہکوں اور عملے کے مابین جھگڑے معمول بن گئے۔ اس ضمن میں ایبٹ آباد کے شہریوں نے صحافیوں کو بتایاکہ ڈے ٹوڈے نامی سٹور پرسیل کے نام پر لوگوں کو دونمبر اور غیرمعیاری کپڑے وغیرہ فروخت کرکے دونوں ہاتھوں سے لوٹا جارہاہے۔ ڈے ٹوڈے نامی سٹور پر فروخت کئے جانیوالے ملبوسات، سویٹریں اور جیکٹ وغیرہ انتہائی غیرمعیار ی ہیں۔ اور ان کے نرخ بھی بہت زیادہ ہیں۔ ڈے ٹوڈے سٹور سے خریدے جانیوالے ملبوسات پہلی دھلائی میں ہی خراب ہوجاتے ہیں۔ جب ان کی تبدیلی یا واپسی کیلئے سٹور پر جاتے ہیں تو ڈے ٹوڈے کا عملہ انتہائی بداخلاقی اور بدتمیزی سے پیش آتاہے۔ اورخریدے جانیوالے ملبوسات کی تبدیلی یا واپسی نہیں کرتا۔

شہریوں نے الزام لگایاکہ ڈے ٹوڈے پر فروخت کئے جانیوالے تمام ملبوسات انتہائی غیرمعیاری ہیں۔ لاہور اور کراچی جیسے بڑے شہروں کی ریڑھیوں پر جو ملبوسات فروخت کئے جاتے ہیں۔ اس قسم کے ملبوسات سستے خرید کر، ایبٹ آباد میں انتہائی مہنگے داموں فروخت کئے جارہے ہیں ۔ اور جب لوگ ان غیرمعیاری ملبوسات کی تبدیلی یا واپسی کیلئے ڈے ٹوڈے سٹور پر جاتے ہیں تو ان کیساتھ ہتک آمیزرویہ اختیار کیاجاتاہے۔ شہریوں نے کنزیومر پروٹیکشن اور کمشنر ہزارہ سے ڈے ٹوڈے سٹور کی لوٹ مار پر سخت کارروائی کا مطالبہ کیاہے۔


Comments

comments