کوکل برسین میں شوکت تنولی کا تاریخی جلسہ۔ مخالفین کی نیندیں حرام۔


ایبٹ آباد:اہلیان کوکل برسین شوکت تنولی پرمتفق ۔ پچیس جولائی کو کامیابی یقینی ہوگئی۔ ذرائع کے مطابق قومی اسمبلی کے امیدوار حلقہ این اے سولہ شوکت تنولی نے کوکل برسین میں ایک بڑے جلسہ عام کا انعقاد کیا۔ جس میں پوری یونین کونسل سے سینکڑوں کی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی۔ اس موقع پر مقررین نے کہاکہ شوکت تنولی تناول اور حویلیاں سرکل کے پسماندہ علاقوں کا حقیقی نمائندہ ہے۔ اور شوکت تنولی کی بدولت ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ حویلیاں اور تناول سرکل کو نمائندگی ملے گی۔ ان شاء اللہ ہم سب لوگ پچیس جولائی کو شوکت تنولی کو بھرپور طریقے سے کامیاب بنائیں گے۔

جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے شوکت تنولی کا کہناتھاکہ سابق وفاقی وزیر امان اللہ خان جدون جب وزیر پٹرولیم رہے تو انہوں نے حویلیاں سرکل کے دیہی علاقوں میں بھی گیس کی سہولیات پہنچائیں۔ لیکن تناول کو گیس سے محروم رکھاگیا۔ کیونکہ تناول کسی بھی ایم این اے کی ترجیحات میں شامل نہیں رہا۔ میں دوراتوں تک سو نہیں سکا۔ پھر اچانک میرے ذہن میں اللہ تعالیٰ کی طرف سے ایک خیال آیا اور میں نے فیصلہ کیاہے کہ آٹھ جولائی کو کالج گراؤنڈ میں عمران خان کے جلسے کے اگلے روز یعنی نوجولائی کو اسی مقام پر ایک بہت بڑا جلسہ عام منعقد کرکے اہلیان تناول اپنی پاور شو کریں گے۔ میری تناول کے تمام لوگوں سے اپیل ہے کہ وہ نوجولائی کو کالج گراؤنڈ میں پہنچیں اور اپنے اتحاد کا ثبوت دیں۔ اگر اس مرتبہ تناول کو قومی اسمبلی میں نمائندگی نہ ملی تو یقیناًتناول اگلے دس سال کیلئے مزید پیچھے چلاجائے گا۔


Comments

comments