ایبٹ آباد شہرکو دوماہ کے اندرریڑھیوں اورتھڑوں سے پاک کیاجائے: پشاورہائیکورٹ کا بڑافیصلہ آگیا۔


ایبٹ آباد:پشاورہائیکورٹ نے شہر کی تمام سڑکوں، گلیوں سے ریڑھیوں اورتھڑوں کے خاتمے کیلئے دوماہ کی ڈیڈ لائن دے دی۔ تحصیل ناظم نے پشاور ہائیکورٹ کے احکامات پر فوری طور پر عملدرآمد کرنے کا حکم جاری کردیا۔اس ضمن میں ذرائع نے صحافیوں کو بتایاکہ پشاورہائیکورٹ کے ڈبل بینچ نے پٹیشن نمبر: 294-A/2018 کے پیرا پانچ میں حکم جاری کرتے ہوئے کہاکہ ضلع ایبٹ آباد کی انتظامیہ کوحکم جاری کیاہے کہ عیدگاہ روڈ، کچہری روڈ اور گوردوارہ گلی میں قائم کیبنوں، ریڑھیوں، تھڑوں کو دو ماہ کے اندر اندر کلیئر کیاجائے۔

جن ریڑھی بانوں کے پاس لائسنس ہیں ان کوپرانے ہری پوراڈہ کوجوکہ ای آکشن کے ذریعے تیس جون 2019ء تک پارکنگ کیلئے ٹھیکہ پر دیاگیاہے۔ اس جگہ پر تمام ریڑھیوں، تھڑوں اورکیبنوں کو منتقل کیاجائے۔ تاکہ شہریوں کوسڑکوں پر چلنے میں آسانی ہو۔ جن ریڑھی بانوں کے پاس لائسنس نہیں ہیں۔ وہ دو ماہ کے اندر اپنے لئے متبادل روزگار کا انتظام کرلین۔ عدالت عالیہ نے حکم جاری کیاکہ دو ماہ کے اندر اندر اس فیصلے پر عملدرآمد کرکے پشاور ہائیکورٹ میں رپورٹ جمع کرائی جائے۔ ذرائع کے مطابق تحصیل ناظم اسحاق سلیمانی نے ٹی ایم او اور ٹی ایم اے ملازمین کو پشاور ہائیکورٹ کے احکامات پر فوری طور پر عملدرآمد کرنے کا حکم جاری کردیاہے۔

gif

gif


Comments

comments