سردار شیربہادرکاچارحلقوں پرپنجہ آزمائی کا اعلان۔


ایبٹ آباد:سردار شیربہادرنے دوقومی اور دو صوبائی اسمبلی کے حلقوں پر الیکشن لڑنے کا اعلان کردیا۔ اس ضمن میں ذرائع نے صحافیوں کو بتایاکہ پی ٹی آئی کے سابق ضلعی صدر و سابق ضلع ناظم سردار شیربہادر کو حکمران جماعت نے تین سالہ عدالتی کارروائی کے بعد عہدے سے ڈی سیٹ کروادیا۔ سردار شیربہادر کو یہ بھی اعزاز حاصل ہے کہ انہوں نے ایشین ڈویلپمنٹ بنک سے ایبٹ آباد شہر کیلئے ایک ارب سے زائد کے ترقیاتی فنڈز حاصل کئے۔ جن کی مدد سے ایبٹ آباد شہر میں بیوٹی فکیشن کے کام کو مکمل کیاگیا۔ سردار شیربہادر کو پی ٹی آئی سے نکلوانے کے بعدعلی خان جدون کو ایبٹ آباد کا ضلع ناظم بنادیاگیا۔ عام انتخابات قریب آتے ہی ضلع ناظم علی خان جدون کو پی ٹی آئی نے حلقہ این اے سولہ جبکہ نائب ناظم سردار وقار نبی کو حلقہ پی کے سینتیس سے امیدوار نامزد کردیاگیاہے۔

حکمران جماعت کی اس عدالتی جنگ کے اختتام پرایبٹ آباد کے شہریوں کو یقین تھاکہ اربوں روپے کے رکے ہوئے فنڈز سے علی خان جدون ایبٹ آباد کی تقدیر بدل دیں گے۔ لیکن ایسا نہ ہوسکا۔ عام انتخابات میں حصہ لینے کیلئے علی خان جدون، سردار وقار نبی سمیت دیگر بلدیاتی نمائندوں کو اپنے عہدوں سے مستعفی ہونے پڑے گا۔ تاہم دوسری جانب سابق ضلع ناظم سردار شیربہادر جوکہ انتقام کی آگ میں جل رہے ہیں۔ موصوف نے بیک وقت ایبٹ آباد کے دو قومی اسمبلی کے حلقوں این اے پندرہ اور سولہ جبکہ دو صوبائی حلقوں پی کے سینتیس اورانتالیس سے الیکشن میں حصہ لینے جارہے ہیں۔ ذرائع کے مطابق سردار شیربہادر ان چاروں حلقوں میں اپنی سیاسی حریفوں کیخلاف انتخابی معرکہ لڑیں گے۔ ان چار میں سے کتنے حلقوں میں سردار شیربہادر کو کامیابی ملے گی۔ اس بات کا فیصلہ پچیس جولائی کو ہی سامنے آئے گا۔


Comments

comments