رمضان المبارک کی خوشی میں تاجروں نے نرخ بڑھالئے۔ 


ایبٹ آباد:رمضان المبارک کی خوشی میں تاجروں نے اشیاء خوردونوش کے نرخ بڑھالئے۔ پھل فروشوں کی چاندی۔ ضلعی انتظامیہ نے بھی کھلی چھٹی دے دی۔ اس ضمن میں شہریوں نے صحافیوں کو بتایاکہ غیرمسلم ممالک میں عیسائیوں ،یہودیوں اور ہندؤں کے تہواروں پر مختلف چیزوں کی قیمتوں میں نمایاں کمی کی جاتی ہے۔ پاکستان میں بھی بڑی کمپنیاں رمضان المبارک کے موقع پراشیاء خوردونوش کے علاوہ دیگرچیزوں کی قیمتوں میں کمی کرتی ہیں۔لیکن بدقسمتی سے گلی محلے اوربازاروں کے دوکاندار رمضان المبارک کی خوشی میں اشیاء خوردونوش کی قیمتیں بڑھادیتے ہیں۔

ایبٹ آباد شہر میں رمضان المبارک سے قبل ایک کلو مٹرکی قیمت اسی روپے تھی۔ یکم رمضان کو یہی مٹر 180روپے کلو فروخت کیاجارہاتھا۔ رمضان سے قبل آلو بیس روپے کلوتھے۔ رمضان شروع ہوتے ہی ان کی قیمت تیس روپے، ٹماٹر چالیس سے بڑھا کرساٹھ، پیاز جوکہ بیس روپے کلوتھارمضان المبارک کی خوشی میں چالیس روپے کلو فروخت کیاجارہاہے۔ رمضان سے قبل تربوز بیس روپے کلوتھا۔ رمضان المبارک کی خوشی میں اس کی قیمت میں بھی دس روپے کا اضافہ کردیاگیاہے۔ آم جس کی قیمت رمضان سے قبل ایک سو بیس روپے کلو تھی۔ رمضان شروع ہوتے ہی آم کی قیمت دو سو روپے فی کلوکردی گئی ہے۔اسی طرح دیگرپھلوں سیب، آڑو، خربوزہ وغیرہ کی قیمتوں میں بھی بیس سے چالیس روپے کا اضافہ کردیاگیاہے۔ پاکستانی کھجور جوکہ رمضان سے قبل ایک سو بیس روپے کلو تک باآسانی مل جاتی تھی۔ رمضان المبارک کی خوشی میں کھجور کی قیمت بھی 220 روپے کلو کردی گئی ہے۔


Comments

comments