ڈی ایس پی پلازہ میں خرم شہزاد کی پراسرار موت۔ 


ایبٹ آباد:ڈی ایس پی پلازہ میں دوکاندار کی پراسرار موت۔ لاش پوسٹمارٹم کے بعد ورثاء کے حوالے۔ اس ضمن میں مقامی ذرائع نے صحافیوں کو بتایاکہ گجرقبیلے سے تعلق رکھنے والا میرپور کا رہائشی 35 سالہ خرم شہزاد ولد محمد اشرف ایوب ٹیچنگ ہسپتال کے سامنے ڈی ایس پی پلازہ میں عینک کا کاروبار کرتاتھا۔ منگل کے روز اس کی بیٹی کی سالگرہ تھی۔ وہ اپنے گھر بیٹی کی سالگرہ کا کیک چھوڑ کر واپس دوکان پر آیا۔ شام کے وقت کوئی گاہک اس کی دوکان میں گیا تو وہ زمین پر گرا ہواپڑاتھا۔ جس پر خرم شہزاد کو ایوب ٹیچنگ ہسپتال لے جایاگیا۔ جہاں ڈاکٹروں نے اس کی موت کی تصدیق کردی۔

خرم شہزاد کی پراسرار موت کی اطلاع پولیس کو دی گئی۔ ڈاکٹروں کے مطابق خرم شہزاد ایک نوجوان آدمی تھا اور اس کی ہارٹ اٹیک وغیرہ سے موت نہیں ہوسکتی۔ جبکہ اس کے ایک گھٹنے پرچوٹ کا نشان پایاجاتاہے۔ خرم شہزاد کے ورثاء کی رپورٹ پر پولیس نے پوسٹمارٹم کے بعد مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کردی ہے۔


Comments

comments