بلاسٹنگ کے دوران تودہ تلے دب کر دومزدورجاں بحق۔


ہری پور(یاورحیات)سورج گلی کے مقام پر کرش بلاسٹنگ کے دوران تودہ گرنے سے دو افراد دب کر جاں بحق ہو گے تودہ کے نیچے دب کر دو جاں بحق ہونیوالے مزدوروں کی لاشوں کو اپنی مدد آپ کے تحت ملبہ سے نکال کر لاشوں کوخان پور ہسپتال منتقل کر دیا گیا پہاڑی کو کاٹنے کے دوران ہیوی بلاسٹنگ کی گی تھی جس کے دوران تودہ نیچے آ گرا تھا لاشیں پوسٹ مارٹم کے لیے ہسپتال منتقل بعد ازاں تدفین کے لیے ورثاء کے حوالہ کر دی گئیں۔
پولیس ذرائع کے مطابق خان پور کے علاقے سورج گلی کے قریب لگے نیازی برادر کریش پلانٹ پر ہیوی بلاسٹینگ کے دوران ملبے تلے دو مزدور دب گئے ہیوی بلاسٹینگ سے قریب واقعہ آبادی میں رہائشی مکان لرز اٹھے لوگ گھروں سے باہر نکل آئے تاہم واقعہ کے بعد کریش پلانٹ پر علاقہ کے عوام اور میڈیا کو حادثہ کی جگہ کرش پلانٹ انتظامیہ نے نہیں جانے دیا گیا ملبے تلے دبے مزدوروں کو پلانٹ مالکان نے مزدوروں کی مدد سے نکالا تاہم اس واقعے کی اطلاع پولیس سے بھی خفیہ رکھی گئی اور پولیس بعد میں ہسپتال پہنچ گئی۔

مرنے والے مزدوروں میں سے ایک محمد سلیم ولد غلام نبی سکنہ کہوٹہ کا رہائشی ہے جبکہ دوسرے مزدور ممتاز احمد ولد محمد اسحاق کا تعلق سرگودھا سے ہے آبادی کے قریب ہیوی بلاسٹینگ کے خلاف شہری متعدد باراحتجاج کرچکے اور موقف اختیار کرتے رہے ہیں کہ عدالت کی جانب سے آبادی کے قریب کرپشن پلانٹس لگانا عدالت کے اپنے فیصلے کی توھین ہے بلاسٹنگ کے دوران قریبی مکانات کو بھی نقصان پہنچ رہا ہے دونوں مزدوروں کی لاشوں کی پوسٹ مارٹم کے بعد تدفین کے لیے ورثاء کے حوالہ کر دیا گیا ہے جوکہ لاشیں لے کر آبائی علاقوں کو روانہ ہو گے ہیں۔

gif


Comments

comments