یوسی سلہڈکاٹکٹ نہ ملنے کی صورت میں چوہدری دلدار کے حق میں دستبرداری کی تیاریاں۔


ایبٹ آباد: شکست خوردہ امیدوار کی پی ٹی آئی کا ٹکٹ نہ ملنے پر چوہدری دلدار کے حق میں دستبردار ہونے کی تیاریاں۔ اس ضمن میں ذرائع نے صحافیوں کو بتایاکہ چوہدری شکیل کو 2015ء کے بلدیاتی انتخابات میں صوبائی وزیر خوراک قلندر خان لودھی کی جانب سے یونین کونسل سلہڈ میں تحصیل کا الیکشن لڑنے کیلئے پاکستان تحریک انصاف کا ٹکٹ دیاگیاتھا۔ چوہدری شکیل جن کا کوئی سیاسی قد کاٹھ نہیں ہے۔ موصوف صرف سیاسی قائدین کے آگے پیچھے گھومنے اور چابلوسی میں مہارت رکھتے ہیں۔ 2015ء کے بلدیاتی انتخابات میں یونین کونسل سلہڈ کے لوگوں نے پی ٹی آئی کے نامزد کردہ امیدوار چوہدری شکیل کو بری طرح مسترد کردیا۔ جبکہ پی ٹی آئی کے کمزور امیدوار کی بجائے جماعت اسلامی کے مجتبیٰ حسن کو بھاری اکثریت سے کامیاب بنایا۔

ذرائع کے مطابق تحصیل کے الیکشن میں بری طرح پٹنے کے بعد، چوہدری شکیل اب سلہڈ کے ممبر ضلع کونسل کی نشست پر الیکشن لڑنے کیلئے پر تول رہے ہیں۔ اور انہوں نے ایک مرتبہ پھر صوبائی وزیر خوراک قلندر خان لودھی کے گھر کے چکر لگانا شروع کررکھے ہیں۔ اور قلندر لودھی نے بھی اندرون خانہ چوہدری شکیل کو پی ٹی آئی کا ٹکٹ دینے کی یقین دہانی کروادی ہے۔ ذرائع کے مطابق یوسی سلہڈ کیلئے پاکستان تحریک انصاف کا ٹکٹ ملک سلیمان یا ثاقب علی میں سے کسی ایک کو دیئے جانے کا امکان ہے۔ تاہم دوسری جانب چوہدری شکیل نے پی ٹی آئی کا ٹکٹ نہ ملنے کی صورت میں اپنے علاقے کے امیدوار چوہدری دلدار کے حق میں دستبردار ہونے کا فیصلہ کیاہے۔


Comments

comments