حجامہ کیوں ضروری ہے؟


ڈاکٹر مسعود اختر تنولی
صدر ہزارہ ہومیو پیتھک ایسوسی ایشن
0333-5261525،0300-5937385


A Complementary therapy Hijama or wet Cupping , needs lighter regulation, say experienced Practitioners Hijama is used to treat a wide rang of condition including migraines and hay fever and involves cutting the skin and drawing blood with suction cups.

لغوی معنی : جحامہ کا لغوی معنی ’’پکڑنا‘‘ ہے یعنی اضافی ،غیرضروری ،،فاسد ، غیر طبعی ،گندے خون کو حجامہ کے ذریعے پکڑ کر جسم سے نکال دیا جاتا ہے ۔حجامہ کو پچھنے لگانا یا سینگی کھچوانا بھی کہا جاتا ہے ،قدیم دور میں جو حجامہ جانور کے سینگ لگا کر کیا جاتا تھا اس کو سینگی لگانا کہتے ہیں ۔
حجامہ کی شرعی حیثیت : حجامہ کی شرعی حیثیت احادیث نبوی ؐ سے ثابت ہے ،حضور پاکؐ نے فرمایا کہ علاج معالجے کیلئے تم جو طریقہ اختیار کرتے ہو ان میں بہترین طریقہ حجامہ ہے ۔شب معراج پر آپ ؐ فرشتوں کے جس گروہ کے پاس سے بھی گزرتے اس نے آپ ؐ کو کہا (حضور ) آپ اپنی اُمت کو حکم دیجئے کہ حجامہ اختیار کریں ۔

حجامہ کی حالتیں :
(1)حالت احرام میں حجامہ لگوایا جا سکتا ہے ،کیونکہ حضور پاک ؐ نے حالت احرام میں ایک دفعہ درد سر کی وجہ سے حجامہ لگوایا اور دوسری بار پاؤں مبارک میں موچ آنے کی وجہ سے حجامہ کروایا ۔
(2)حالت روزہ : حالت روزی میں حجامہ بھی لگوایا جا تا ہے ۔پیارے نبی نے روزہ کی حالت میں پچھنے لگوائے گویا اس سے نہ تو روزہ ٹوٹتا ہے اور نہ ہی صحت کا نقصان ہوتا ہے ۔
خواتین کا حجامہ : خواتین صنفی طور پر نازک مزاج اور نزاکت پسند پیدا کی گئی ہیں اور عموما خون نکلوانے کے عمل سے خوف زدہ ہو جاتی ہیں اور بیشتر خواتین اس عمل کیلئے آمادہ نہیں ہوتیں ۔مردوں کی طرح عورتوں کا حجامہ لگانا اور لگوانا جائز ہے اور ضرورت کے تحت مرد ،نا محرم عورت کو حجامہ لگا سکتا ہے اور عورت نامحرم مرد کو حجامہ لگا سکتی ہے ۔

حجامہ کی تواریخ : نبی کریم ؐ نے فرما یا ہر قمری ماہ کی بہترین تاریخ حجامہ لگوانے کیلئے سترہ، انیس یا اکیس ہے ۔یعنی چاند کی 17 ،19 اور21کو حجامہ لگوانا افضل ترین ہے ۔
حجامہ کے فوائد : (1)خون صاف کرتا ہے اور حرام مغز (medulla)کو فعال بنا تا ہے (2)شریانوں پر اچھا اثر ہوتا ہے (3)پٹھوں کے اکڑاؤ کو ختم کرنے کیلئے مفید ہے (4)دمہ اور پھیپھڑوں کے امراض اور انجائنا کیلئے مفید ہے (5)سر درد اور چہرے کے پٹھوں ،درد شقیقہ او دانتوں کے درد کو آرام دیتا ہے (6)آنکھوں کی بیماریوں اورConjunctiuitis میں مفید ہے(7)رحم کی بیماریوں اور ماہواری بند ہو جانے کی تکالیف اور ترتیب سے آنے کیلئے مفید ہے (8)گٹھیا و عرق النساء اور نقرس کے دردوں میں مفید ہے (9)فشار خون میں آ رام پہنچاتا ہے (10)کندھوں ،سینہ اور پیٹھ کے درد میں مفید ہے (11)زیادہ نیند آنے ،کاہلی اور سستی میں مفید ہے (12)ناسورulcers ،چنبل ،مہاسوں اور کارش میں مفید ہے (13)دل کے غلاف اور ورم گردہ میں مفید ہے (14)زہر خورانی میں مفید ہے (15) مواد بھرے زخموں کیلئے مفید ہے (16)الرجی میں مفید ہے (17)جسم کے کسی ھصے میں درد ہو تو بھی حجامہ لگوانے سے فائدہ ہوتا ہے (18)صحت یاب لوگ بھی کروا سکتے ہیں ،کیونکہ حجامہ سنت ہے اس میں 72 بیماریوں کی روک ہے (19)سحر (جادو ) کیلئے بھی مفید ہے
حجامہ کیلئے احتیاطی تدابیر :
(1)کمزور اور بہت زیادہ دُبلے افراد حجامہ نہ لگوائیں بلکہ معمر اور کمزور افراد بھی حجامہ نہ لگوائیں (2) پانی کی کمی کا شکار dehydration بچوں کو حجامہ نہ لگوائیں ۔(3)جگر کے شدید امراض میں مبتلاء اشخاص حجامہ نہ لگوائیں (4)اسقاط کی مریضہ، قے ہو جانے کے فوراً بعد ،گردہ کی صفائی کروانے والے مریض ،دل کے Valve تبدیل کروانے والے حضرات ،حاملہ عورت کو ابتدائی تین مہینوں میں خون کو پتلا کرنے والی ادویات مثلاً(Asprin, Clopoclogret, Warfarin)استعما کرنے والے مریض ،اگر کسی مریض نے دل میں Pace Maker لگوا رکھا ہو، تو اس کے دل پر حجامہ نہ لگوائیں ،نشہ آور ادویات کھانے والے حضرات ،اور خوف زدہ شخص کو ،خون کی کمی کے مریضوں ،کم فشار خون کے مریضوں کی صورت میں کمر کے قریب ریڑھ کی ہڈیوں کے قریب حجامہ نہیں لگوانا چاہیے ۔
حجامہ لگوانے کے بعد غسل کر لیں یہ مستحب ہے اور ایک گھنٹہ تک کچھ نہ کھائیں ،حجامہ بدن سے بیماریوں کا سبب بننے والے فاسد سمی مواد اور ردی ذخائر کا اخراج ہی حجامہ کا مطلوب ہے ۔حجامہ پر جلد پر نشتر سے چیرا (Cut)دیکر فاسد خون نکالا جاتا ہے ،حجامہ کوئی کھیل تماشہ یا ایسا غیر اہم طریقہ علاج نہیں ہے کہ جسے بغیر سمجھے یا بغیر سیکھے ہر کوئی لگوانا شروع کر دے ۔جیسا کہ آج کل اسکا عام رواج ہوتا جا رہا ہے بلکہ یہ ایک نہایت اہم اور ذمہ دارانہ باریک بینی والا کام ہیجس میں جسم میں نشتر کے ذریعے چیر دے کر فاسد ،غیر ضروری خون اور سمی مادوں کو نکال دیا جاتا ہے اور مریض کو شفاء مل جاتی ہے ،حجامہ کو کھیل یا معمولی جاننا انسانی جانوں سے کھیلنے کے مترادف ہے ،جسم انسانی پر کٹ لگاناچیرا دینا مشکل نہیں ،کیونکہ ایک معمولی فِفل نادان بھی چھری یا چاقو پکڑ کر جسم کو چھید سکتا ہے ،حجامہ کے اصول ،قانون ،قائدے و کلیہ اور محفوظ طریقہ کو سمجھنا ایک کپنگ ڈاکٹر(Cupping Drcter) کیلئے نہایت ضروری ہے ۔
دُعا ہومیو پیتھک کلینک کنج قدیم روڈ فوارہ چوک ایبٹ آباد میں حجامہ کرنے کیلئے چار لیڈیز ڈاکٹرز موجود ہیں جو کہ خواتین کا حجامہ بڑے ذمہ دارانہ طریقے سے کرتی ہیں۔حجامہ اب چین کا قومی طریقہ علاج ہے اس کے علاوہ جرمنی ،امریکہ ،آسٹریلیامیں بھی اس کی ڈیمانڈ بڑھ رہی ہے UK میں بھی حجامہ کو اہمیت ھاصل ہے جبکہ ویتنام میں حجامہ کو سرکاری سطح پر مقام حاصل ہے ،ترکی نے بھی اس پر بہت محنت کی ہے ۔


Comments

comments