قوم لوط کے چارپیروکار وں نے بدفعلی کے دوران نوجوان کی ویڈیوبنالی۔ مقدمہ درج۔ چاروں گرفتار۔

ایبٹ آباد:قوم لوط کے چارپیروکار وں نے بدفعلی کے دوران نوجوان کی ویڈیوبنالی۔ تھانہ سٹی میں مقدمہ درج۔ چاروں کو گرفتار کرلیاگیا۔ اس ضمن میں پولیس اور مقامی ذرائع نے وائس آف ہزارہ کو بتایاکہ صحافیوں کو بتایاکہ ایبٹ آباد کے نواحی گاؤں دوبتھر کا رہائشی احسن علی ولد عجب خان قوم راجپوت سوزوکی گاڑی چلاکر محنت مزدوری کرتاہے۔ دوبتھر کا رہائشی بیس سالہ حمزہ ولد صدیق اس کا دوست تھا۔ حمزہ نے اگست 2019ء کے مہینے میں احسن علی سے کہاکہ مجھے ڈرائیونگ سکھا دو۔ جس پر دونوں کے مابین ڈرائیونگ سکھانے کا زبانی معاہدہ ہوا۔ اور حمزہ نے پانچ ہزار روپے احسن علی کو ڈرائیونگ سکھانے کیلئے ایڈوانس ادا کردیئے۔ احسن علی دس روز تک حمزہ کو ڈرائیونگ سکھاتارہا۔ ڈرائیونگ سیکھنے کے بعد حمزہ نے پانچ ہزار روپے کی ادا شدہ رقم واپس کرنے کا مطالبہ کردیا۔ جس پر دونوں میں معاملات بگڑگئے۔ احسن کا کہناتھاکہ دس روز تک تم ڈرائیونگ سیکھتے رہے ہو۔ میری دیہاڑی بھی نہیں لگی اور گاڑی میں گیس بھی ڈالی گئی۔ ڈرائیونگ سیکھنے کی فیس پانچ ہزار روپے واپس نہ کرنے پر حمزہ نے احسن علی کو سبق سکھانے کا فیصلہ کرلیا۔

وائس آف ہزارہ کو ملنے والی معلومات کے مطابق 28اگست2019ء کی رات حمزہ اپنے تین دوستوں اخترنواز ولد تاج محمد عمر35سال، انیس ولد شیر عمر24سال اور رئیس ولد بشیر عمر32سال ساکنان دوبتھرکے ہمراہ احسن علی کو بھلاپھسلا کراپنے ساتھ لے گئے۔ جہاں چاروں نے باری باری زبردستی احسن علی کیساتھ بدفعلی کی اور ساتھ میں موبائل فون پر اس کی ویڈیو اور تصاویر بھی بناتے رہے۔ احسن علی نے شرم اوربے عزتی کی وجہ سے اپنے ساتھ ہونیوالے واقع کے بارے میں کسی کو نہیں بتایا۔ ذرائع کے مطابق قوم لوط کے پیروکاروں اخترنواز، انیس، رئیس اور حمزہ کسی محفل میں لوگوں کو احسن کی ویڈیو دکھا رہے تھے کہ کسی نے احسن کے گھروالوں کو بتادیا۔ معاملہ کھلنے پر احسن علی نے پولیس چوکی شملہ پہاڑی میں رپورٹ درج کرادی۔ پولیس چوکی شملہ پہاڑی کے انچارج آفتاب نے فوری کارروائی کرتے ہوئے اخترنواز، انیس، رئیس اور حمزہ کو گرفتار کرلیا۔ احسن علی کا ڈی ایچ کیوہسپتال میں طبی معائنہ کروایا گیا۔ جس میں جنسی زیادتی کی تصدیق ہوگئی۔ تھانہ سٹی ایبٹ آباد میں اخترنواز، انیس، رئیس اور حمزہ کیخلاف زیر دفعات 355, 377, 506/34, 342پی پی سی کے تحت ایف آئی آر درج کرکے مزید تفتیش شروع کردی ہے۔

Facebook Comments