شیخ البانڈی منشیات کی منڈی میں تبدیل۔ پولیس کی معنی خیزخاموشی۔

ایبٹ آباد:شیخ البانڈی منشیات کی منڈی میں تبدیل۔ پولیس کی معنی خیزخاموشی۔ اس ضمن میں مقامی ذرائع نے صحافیوں کو بتایاکہ شیخ البانڈی میں منشیات کی فروخت کھلے عام جاری ہے۔ منشیات فروش گروہ کا ایک بڑا نیٹ ورک شیخ البانڈی سے آپریٹ کیاجارہاہے۔ اس نیٹ ورک میں شامل کارندے نہ صرف شیخ البانڈی بلکہ ملکپورہ، ایبٹ آباد شہر، نواں شہر، میرپور، کاکول، ایوب میڈیکل کالج، کامسیٹس یونیورسٹی، سرکاری کالجوں کے علاوہ ہاسٹلوں میں بھی منشیات کھلے عام سپلائی کررہے ہیں۔ مقامی ذرائع کے مطابق اس منشیات فروش گروہ کو چند اہم شخصیات کی حمایت حاصل ہے۔ جبکہ پولیس، ڈسٹرکٹ سیکورٹی اور سپیشل برانچ کے اہلکار منتھلیوں کے عوض خاموشی اختیار کئے ہوئے ہیں۔ ذرائع کے مطابق یومیہ دومن سے زائد چرس اور شراب کی سینکڑوں بوتلوں کے علاوہ آئس کی گولیاں فروخت کی جاتی ہیں۔ ایبٹ آباد کے شہریوں نے انسپکٹرجنرل خیبرپختونخواہ پولیس اور ڈی جی اینٹی نارکاٹیکس خیبرپختونخواہ سے منشیات فروشوں کے اس گروہ کی فوری گرفتاری اور سخت کارروائی کا مطالبہ کیاہے۔

Facebook Comments