خواجہ سراؤں کا حربہ بھی ناکام۔ کوٹھیالہ قبرستان سے تجاوزات ختم کرنے کی تیاریاں مکمل۔

ایبٹ آباد: آپریشن سے بچنے کیلئے خواجہ سراؤں کی خدمات بھی ضائع۔عدالت نے بھی درخواست خارج کردی۔ کوٹھیالہ قبرستان کو لینڈ مافیا سے واہگزار کرانے کی تیاریاں مکمل۔ وائس آف ہزارہ کو دستیاب معلومات کے مطابق سپریم کورٹ آف پاکستان نے پورے ملک میں قبرستانوں کو قبضہ مافیا سے آزاد کرانے کا حکم جاری کررکھاہے۔ کوٹھیالہ میں اٹھارہویں صدی سے محکمہ مال اوردیگرسرکاری کاغذات میں قبرستان مقبوضہ اہل اسلام کے نام سے بہت بڑی زمین ہے۔ جہاں پر پرانی قبریں ہیں۔ اورچند لوگوں نے محکمہ مال اور انتظامیہ کی ملی بھگت سے اس قبرستان پر درجنوں دوکانیں تعمیر کررکھی ہیں۔ جس کیخلاف پشاور ہائیکورٹ میں مقامی لوگوں نے رٹ پٹیشن دائر کرکے قبرستان پر تعمیر کی جانیوالی تمام دوکانیں مسمار کرنے کا مطالبہ کیا۔

پشاور ہائیکورٹ نے کوٹھیالہ قبرستان کو فوری طور پر قبضہ مافیا سے واگزار کرنے کا حکم جاری کیا۔ پشاور ہائیکورٹ کے احکامات کی روشنی میں ڈپٹی کمشنر ایبٹ آباد نے ایڈیشل اسسٹنٹ کمشنر کو رپورٹ پیش کرنے کا حکم جاری کیا۔ جس پر ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر نے چند روز قبل محکمہ مال کے اہلکاروں کے ہمراہ قبرستان کا معائنہ کیا تو قبرستان کے ایک بہت بڑے حصے پر دوکانیں تعمیر کی گئی تھیں۔ ٹی ایم اے کی جانب سے کوٹھیالہ بازار میں قبرستان پر دوکانیں تعمیر کرنیوالے دوکانداروں کو نوٹس جاری کئے گئے۔

جس پر قبضہ مافیا نے خواجہ سراؤں کی خدمات حاصل کرتے ہوئے چندروز قبل ایبٹ آباد میں خواجہ سراؤں سے احتجاجی مظاہرہ کروایا۔ خواجہ سراؤں کو مبینہ طور پر پیسے دے کر لایاگیا۔ احتجاجی مظاہرے میں پورے ہزارہ سے خواجہ سراؤں نے شرکت کی۔ دیکھنے والے بھی حیران رہ گئے کہ کوٹھیالہ جیسے چھوٹے سے علاقے میں اتنی بڑی تعداد میں خواجہ سراء کہاں سے آگئے۔ تاہم خواجہ سراؤں کا شو بھی ناکامی سے دوچار ہوا۔ قبرستان پر قبضہ کرنیوالوں نے عدالت میں حکم امتناعی کیلئے درخواست دی۔ جو کہ عدالت نے مسترد کردی۔ ذر ائع کے مطابق ضلعی انتظامیہ سے کوٹھیالہ میں آپریشن کیلئے تیاریاں مکمل کرلی ہیں۔ تاجروں کو قبرستان والی اراضی خالی کرنے کیلئے نوٹس جاری کرنے کا مرحلہ مکمل کرلیاگیاہے۔ اور کسی بھی وقت کوٹھیالہ میں آپریشن شروع کردیاجائے گا۔

تاہم دوسری جانب لینڈ مافیا نے سوشل میڈیا پر پروپیگنڈہ مہم بھی شروع کررکھی ہے۔ کوٹھیالہ کے لوگوں نے کمشنر ہزارہ اور ضلعی انتظامیہ کے افسران سے مطالبہ کیاہے کہ کوٹھیالہ کے قدیمی قبرستان کو ہر صورت لینڈ مافیا سے آزاد کروایا جائے اورایسے عناصر کیساتھ آہنی ہاتھوں سے نمٹاجائے۔

Facebook Comments