ڈی ایچ کیوہسپتال ایبٹ آباد کی نرسنگ سٹاف نے احتجاج اورہڑتال شروع کردی۔

ایبٹ آباد(وائس آف ہزارہ)ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال ایبٹ آباد کی نرسنگ سٹاف اپنے حقوق کے لئے سراپا احتجاج بن گئیں،ٹوکن احتجاج میں نرسز نے اپنے بازوؤں پر سیاہ پٹیاں باندھ کر ڈیوٹی سر انجام دی،ہسپتال میں پرامن احتجاج کے دوران نعرہ بازی کی گئی اور حکومت سے مطالبہ کیا کہ 29 مارچ تک ہمارے جائز مطالبات پورے نہ کئے گئے تو 30 مارچ کو صوبائی اسمبلی کے سامنے احتجاج کریں گے۔اس موقع پر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے نرسز نے کہا ہے کہ ہمارے مطالبات میں پروموشن اور سروس سٹرکچر،ایم ٹی آئی نرسز ریگولیشن،نرسز کے لئے الگ ڈائریکٹریٹ،ہیلتھ پروفیشنل الاؤنس،دس ہزار نرسز کی ریکروٹمنٹ اور دیگر مطالبات شامل ہیں،ہم فی الحال ٹوکن احتجاج کر رہی ہیں مگر حکومت ہمارے مطالبات میں سنجیدگی نہیں لے رہی اگر حکومت نے اسی طرح عدم دلچسپی کا مظاہرہ کیا تو صوبائی قیادت کے حکم پر احتجاج کا دائرہ کار بڑھا دیں گیں اور 30 مارچ کو صوبائی اسمبلی کے سامنے دما دم مست قلندر ہو گا۔

یہ بھی پڑھنا مت بھولیں

زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران

نیوز ہزارہ

error: Content is protected !!