شیروان میں دس بچی کیساتھ جنسی زیادتی۔ انوری ویلفیئر ٹرسٹ کے ایم ڈی شبیرتنولی نے بڑااعلان کردیا۔

ایبٹ آباد:شیروان میں بچی کیساتھ جنسی زیادتی۔ انوری ویلفیئر ٹرسٹ کے ایم ڈی شبیرتنولی میدان میں آگئے۔ متاثرہ خاندان کی مالی اور مفت قانونی امداد کا اعلان۔ درندہ صفت ملزم کو کسی صورت معافی نہیں دی جائے گی: متاثرہ بچی کے والد کو یقین دہانی۔ ذرائع کے مطابق دوبئی میں مقیم شبیرخان تنولی نے لوئرتناول میں عوام کی فلاح و بہبود کیلئے انوری ویلفیئر ٹرسٹ کی بنیاد رواں سال رکھی۔ انوری ویلفیئر ٹرسٹ کے زیر اہتمام لوئر تناول میں فری ایمبولینس سروس شروع کی گئی۔ جوکہ کامیابی سے جاری ہے۔

شبیر تنولی کے بھائی نصیر تنولی ایڈوکیٹ جنہوں نے برطانیہ سے بیرسٹری کی ڈگری حاصل کی ہوئی ہے۔ نصیر تنولی ایڈوکیٹ نے متعدد غریب اور بے سہارا افراد کے کیس مفت لڑے اور انہیں انصاف دلانے میں اہم کردار ادا کیا۔ پتیل محلہ شیروان میں عبدالرقیب نامی چالیس سالہ شخص کے ہاتھوں جنسی زیادتی کا نشانہ بننے والی دس سالہ بچی (ن) کے والد راشد کی دکھ بھری داستان سننے کے بعد شبیر تنولی ایڈوکیٹ نے دوبئی سے انہیں کال کرکے تسلی اور ہرقسم کے جانی، مالی تعاون کی یقین دہانی کروائی۔

شبیر تنولی ایڈوکیٹ کے کہنے پر انوری ویلفیئر ٹرسٹ کی ایمبولینس گاڑی اورعملہ متاثرہ بچے کے گھر پہنچ گیا اور انہیں مالی تعاون فراہم کیا۔ شبیر تنولی ایڈوکیٹ نے صحافیوں سے ٹیلیفونک گفتگو کے دوران بتایاکہ متاثرہ بچی اوراس کے خاندان کو ہم مکمل قانونی اور مالی امداد فراہم کرینگے۔ جس درندے نے یہ حرکت کی ہے اس کو اس کے کئے کی ہر صورت سزا دلوا کررہیں گے۔ ہم دکھ کی اس گھڑی میں متاثرہ خاندان کیساتھ ہیں۔

Facebook Comments