ہمارا فیس بک پیج

تھانہ شیروان کا تفتیشی آفیسر چوری ڈکیتی کرنیوالے ملزمان کوگرفتارکرنے میں ناکام۔

ایبٹ آباد:تھانہ شیروان کی حدود میں بڑھتی چوری کی پے درپے وارداتیں تھانہ شیروان میں تعینات تفتیشی آفیسر کی کارکردگی پر سوالیہ نشان مقدمات تو رجسٹرڈ ہوجاتے ہیں نہ تو چوروں کا سراغ لگتا ہے اور نہ ہی مال مسروقہ برامد ہوتا ہے ہائی پرفائل کیسوں کی۔تفتیش بھی آئی ایچ سی لیول کے اہلکار کرنے لگے اس علاوہ بھی متعدد مقدمات کے ملزمان کا سراغ بھی نہ لگایا جاسکا عالیہ دنوں میں تھانہ شیروان کی حدود بمبوچھی میں چوری کی تین وارداتیں ہوچکی ہیں جن میں ایک واردات ڈی پی او تورغر قمر حیات کے ڈرائیور کے گھر دوسری واردات زبیر نامی شخص کے گھر ہوئی۔

جبکہ تیسری واردات کے مدعی نے محض اس وجہ سے مقدمہ درج نہیں کروایا کہ پولیس نہ تو ملزمان کا سراغ لگا سکتی ہے اور نہ ہی کبھی کسی کا مال برامد ہوا ہے تھانہ شیروان میں تعینات تفتیشی آفیسر صرف اپنا پیریڈ پورا کررہے ہیں چوری کے تمام کیسوں کی تفتیش آئی ایچ سی لیول کے اہلکار کرتے ہیں جو ناتجربہ کاری کی وجہ سے اکثر کیسوں کی تفتیش جدید تیکنیکی بنیادوں پر نہیں کر پاتے اور ملزمان جلد چھوٹ بھی جاتے ہیں ڈی پی او ایبٹ آباد سے عوامی مطالبہ ہے کہ تھانہ شیروان میں تجربہ کار تفتیشی پولیس آفیسر تعینات کیا جائے جو ان تمام اندھی وارداتوں کا سراغ لگا کر اس چور گرہو کو بے نقاب کرے تاکہ آئے روز عوام لٹنے سے بچ سکیں۔

شیئر کریں

Share on facebook
Facebook
Share on twitter
Twitter
Share on whatsapp
WhatsApp
Share on print
Print

اہم خبریں

error: Content is protected !!