ہمارا فیس بک پیج

بیوی نے طلاق لے لی۔ بیٹی کو بھی مار دیاگیا۔ انصاف فراہم کیاجائے: محمد یوسف۔

ایبٹ آباد:طلاق کے بعدسولہ سالہ لڑکی کو زہردے کر مار دیاگیا۔والد نے انصاف کا مطالبہ کردیا۔ اس ضمن میں بانڈی ڈھونڈاں کے رہائشی محمد یوسف نے اپنی دو بیٹیوں اور بیٹے کے ہمراہ پریس کانفرنس کے دوران بتایاکہ بیس سال قبل میری شادی ہوئی تھی اور میری تین بیٹیاں اور ایک بیٹاہے۔ ایک سال قبل میری بیوی نے خلع لے لی بیٹیوں اور بیٹے کو زبردستی راولپنڈی لے گئی جہاں وہ کرائے کے مکان میں رہائش پذیر تھی۔ میری بیٹیاں اور بیٹے ماں کیساتھ خوش نہیں تھے۔ دوہفتے قبل میرے سالے نے فون پر اطلاع دی کہ بڑی بیٹی طیبہ کا انتقال ہوگیاہے۔ جب میں راولپنڈی گیا تو مجھے معاملہ مشکوک لگا۔ جس پر میں نے مقامی تھانہ میں رپورٹ درج کروائی اور لاش کا پوسٹمارٹم بھی کروایا۔ لیکن پولیس مجھے پوسٹمارٹم رپورٹ نہیں دے رہی اورنہ ہی کوئی قانونی کارروائی کررہی ہے۔محمد یوسف نے مزید بتایاکہ میں اپنی دوبچیوں اوربیٹے کی زندگی بچانے کیلئے اپنے ساتھ لے آیا۔میری بچیوں اور مجھے ان سے خطرہ ہے کیونکہ وہ دھمکیاں دیتے ہیں میں نے عدالت کا دروزہ کھٹکھٹایا مگر کوئی شنوائی نہیں ہوئی،میری بچیاں میرے ساتھ خوش ہیں میں چیف جسٹس اور وزیر اعظم سے مطالبہ کرتا ہوں کہ میرے کیس کو شفاف طریقے سے ہنڈل کیا جائے اور مجھے انصاف فراہم کیا جائے اور مجھے میری بچیوں کو تحفظ فراہم کیا جائے۔

شیئر کریں

Share on facebook
Facebook
Share on twitter
Twitter
Share on whatsapp
WhatsApp
Share on print
Print

اہم خبریں

error: Content is protected !!